Home پاکستان بلدیاتی قانون کیخلاف متحدہ کا دھرنا، پولیس کا لاٹھی چارج، متعدد زخمی

بلدیاتی قانون کیخلاف متحدہ کا دھرنا، پولیس کا لاٹھی چارج، متعدد زخمی

کراچی میں متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) کے دھرنے کے بعد پولیس نے کارکنوں پر لاٹھی چارج کیا جس کے بعد رکن صوبائی اسمبلی ، خواتین سمیت متعدد زخمی ہو گئے۔

تفصیلات کے مطابق سندھ کے بلدیاتی قانون کے خلاف ایم کیو ایم نے وزیراعلیٰ ہاؤس کے سامنے احتجاج کیا اور اسی دوران دھرنا دیا۔ دھرنے کے باعث مرکزی شاہراہوں پر ٹریفک کا نظام درہم برہم ہوگیا اور شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

ٹریفک پولیس کے مطابق وزیر اعلی ہاؤس کے سامنے ڈاکٹر ضیا الدین روڈ ٹریفک کے لیے بند کردیا۔ ایمپریس مارکیٹ سےمزارقائد جانےوالا کوریڈور3 بھی ٹریفک کے لیے بند کردیا گیا۔ احتجاجی دھرنے میں خواتین کی بڑی تعداد نے بھی شرکت کی۔

علاوہ ازیں وزیر اعلیٰ کے اطراف میں مرکزی شاہرواں پر آمد ورفت متاثر ہوئی تو گرو مندر، گولیمار اورلسبیلہ کی سڑکوں پر بھی ٹریفک کی روانی متاثر ہوئی۔

اسی دوران سابق میئر کراچی وسیم اختر کا کہنا تھا کہ ہم احتجاج ریکارڈ کرانے آئے ہیں۔ کارکنوں کی بڑی تعداد موجود ہے جو اس کالے قانون کے خلاف اپنا احتجاج کرانے آئے ہیں۔

دھرنے کے باعث پولیس اہلکاروں نے ایم کیو ایم کے کارکنوں پر لاٹھی چارج کیا اور شیلنگ کی جس کے باعث متعدد کارکن زخمی ہو گئے۔

پولیس نے ایم کیو ایم کے کارکنوں کو وزیراعلیٰ ہاؤس کے باہر سے پیچھے دھکیل دیا اور پولیس مظاہرین کو جگہ سے ہٹانے میں کامیاب ہو گئی اور متعدد کارکنوں کو حراست میں لے لیا ہے۔

ترجمان ایم کیو ایم کے مطابق پولیس کے لاٹھی چارج سے متعدد خواتین اور رکن صوبائی اسمبلی صداقت حسین بھی زخمی ہوئے،  انہیں زخمی حالت میں بھی حراست میں لے لیا گیا ہے۔

ایم کیو ایم پاکستان کا جمعرات کو یوم سیاہ منانے کا اعلان

بعدازاں ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما خالد مقبول صدیقی نے کہا کہ کل اس واقعے کے خلاف یوم سیاہ منائیں گے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کی نسل پرست حکومت نے اپنی تاریخ دہرائی ہے۔ ریلی میں خواتین کے ساتھ جس طرح کا سلوک کیا گیا ، یہ ہماری غیرت کا سوال ہے۔ آنسو گیس کے جو شیل چلائے گئے وہ ان کے پیسے ہماری جیب سے آتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کو واضح کرنا ہو گا وہ پاکستان توڑنے والوں کے ساتھ ہیں یا پاکستان بچانے والوں کے ساتھ ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ کے خلاف کارروائی ہونی چاہئے۔ وزیراعظم صاحب اس آئی جی اور ڈی آئی جی کو معطل کروائیں۔ پولیس غیرجانبدارہوجائے، نیوکراچی ٹاؤن کے سابق ناظم کی آنکھ شیل لگنے سے ضائع ہوچکی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ پیپلزپارٹی نے ہمیں دوبارہ للکارا ہے،موجودہ صورتحال میں ہم احتیاط کررہے تھے جمہوریت ہمارے فیصلوں کے نیتجے میں موجود رہے گی،ہم جمہوریت کوواحد راستہ سمجھتے ہیں، زرداری صاحب! اپنے وزیراعلیٰ کو پٹا نہیں ڈالیں گے تو بلاول ہاؤس بھی اسی شہرمیں ہے، سندھ حکومت کوچوبیس گھنٹے کا الٹی میٹم دیتے ہیں، لڑنا نہیں چاہتے لیکن آپ جانتے ہیں کہ ہم لڑنا جانتے ہیں۔

اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے خالد مقبول صدیقی کا کہنا تھا کہ نسل پرست وزیراعلیٰ دعا کرو، اگریہ شہرکھڑا ہوگیا توتمہیں نتائج کا پتا ہے،ٹنڈوالہ یارکا خون ابھی خشک نہیں ہوا تھا تم نے دوبارہ بہادیا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Must Read

ہر اسکریچ کارڈ پر 5 روپے اضافی وصولی، کمپنی کا مؤقف سامنے آگیا

پاکستان میں آپریٹ کرنے والی ایک غیر ملکی موبائل کمپنی نے اخراجات میں اضافے کو جواز بنا کر صارفین سے ہر...

فریضہ حج کی ادائیگی کیلئے آنے والے 5 پاکستانی عازمین انتقال کرگئے

مکہ مکرمہ : فریضہ حج کی ادائیگی کیلئے سعودی عرب جانے والے 5 پاکستانی عازمین انتقال کرگئے۔

ملک میں سونا مزید سستا ہوگیا

ملک میں آج ایک تولہ سونے کی قیمت میں 350 روپے کی کمی ہوئی ہے۔ سندھ صرافہ...

اسحاق ڈار کو نیا پاسپورٹ مل گیا، پاکستان واپسی کی تیاریاں بھی مکمل: ذرائع

ن لیگ کے رہنما اور سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو نیا پاکستانی پاسپورٹ مل گیا۔ قابل...

انگلینڈ کے ورلڈکپ وننگ کپتان اوئن مورگن انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائر

انگلینڈ کے ورلڈکپ وننگ کپتان اوئن مورگن نے انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا۔ انگلینڈ نے مورگن کی...