Home پاکستان جے یو آئی کی تنظیم ’ انصار الاسلام ‘ کا کام کیا...

جے یو آئی کی تنظیم ’ انصار الاسلام ‘ کا کام کیا ہے؟

جمعیت علمائے اسلام (جے یو آئی )کا محافظ دستہ انصار الاسلام ایک معمول کی فورس ہے جسے پارٹی قیادت کی حفاظت کے لیے تشکیل دیا گیا ہے۔

جے یو آئی کی ذیلی تنظیم انصار الاسلام کی تشکیل کا مقصد اور ایجنڈا الیکشن اور ریلیوں کے دوران قیادت کو تحفظ فراہم کرنا ہے۔

جے یو آئی اس گروپ کو پارٹی ڈھانچے میں ایک ونگ کے بجائے ایک تنظیم قرار دیتی ہے ، اس تنظیم کی اپنی ایک درجہ بندی ہے، اس درجہ بندی کے مطابق سب سے اوپر ایک مرکزی رہنما ہوتا ہے جس کے بعد صوبائی، ڈویژنل اور ضلعی لیڈر ہوتے ہیں۔

یہ تربیت یافتہ کارکن ہوتے ہیں جو رضاکار کے طور پر جانے جاتے ہیں، یہ رضاکار خاکی رنگ کی شلوار قمیض میں ملبوس ہوتے ہیں۔

ذیلی تنظیم انصار الاسلام میں ایک انٹیلی جنس ونگ حضرت حذیفہ بن یمان کے نام پر بھی شامل کیا گیا ہے جو حضورﷺ کے اصحاب میں سے تھے۔

انصار الاسلام کی ذمہ داری کیا ہے؟
ان کی ذمہ داری تنظیم کے عوامی اجتماعات کے ارد گرد ہونے والی سرگرمیوں اور مشکوک افراد پر نظر رکھنا ہے، اس ونگ کا ایک اور اہم کام یہ بھی ہے کہ وہ پولیس کی نگرانی کریں تاکہ وہ کسی رہنما کو گرفتار نہ کر سکیں۔

دوسری جانب افراتفری کی صورتحال کے دوران یہ تنظیم اپنے رہنماؤں کیلئے محفوظ طریقے سے باہر نکلنے کا منصوبہ بناتی ہے۔

انصار الاسلام کے کارکنوں کی اکثریت پارکنگ لاٹ، داخلی راستوں اور اسٹیج کے آس پاس تعینات ہوتی ہے، تنظیم کے کارکن عوامی ریلی یا احتجاج سے قبل سکیورٹی پلان کے لیے مقامی پولیس سے بھی ملتے ہیں۔

جے یو آئی کسی بھی غیر متوقع واقعے کو روکنے کے لیے خاکی وردی میں ملبوس اپنے کارکنوں کو ان کے نام اور ڈیوٹی کی جگہ کے ساتھ ڈیوٹی کارڈ فراہم کرتی ہے۔

جے یو آئی کے پیروکاروں کو اعلیٰ قیادت سے ہاتھ ملانے کی اجازت ہے لیکن انصار الاسلام کو سیاسی جماعت کی سکیورٹی کی خاطر ایسا نہ کرنے کی ہدایت ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Must Read

سندھ اور پنجاب کے شہروں میں گیس ناپید، سلنڈر کی مانگ بڑھ گئی

سندھ اور پنجاب کے مختلف شہروں میں گیس ناپید ہوگئی۔ کراچی، حیدرآباد، ملتان اور راولپنڈی میں گیس...

کمان میں تبدیلی کے دو ہی دن بعد آئی ایس پی آر کا سربراہ تبدیل

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)چیف آف آرمی سٹاف جنرل عاصم منیر نے کمان سنبھالنے کے دو ہی دن بعد جمعرات کو پہلی...

خوشی کے موتی

تحریر؛ پروفیسر محمد عبداللہ بھٹیمشک وعنبر سے مہکی زندگی سے بھر پور روشن آنکھوں والا وہ شخص آج پھر میرے پاس...

دہشت گردی کی لہر اور قومی تقاضے!

تحریر؛ شاہد ندیم احمدملک میں دہشت گردی کی ایک بار پھر سے وارداتیں شروع ہو گئی ہیں،اس میں ابتک متعدد افراد...

ڈالر کا بحران اور ہماری معیشت

تحریر؛ جاویدایاز خانمفتاح اسماعیل سابق وزیر خزانہ پاکستان کے بیان نے ملک میں کھلبلی مچا دی ہے کہ "پاکستان کا دیوالیہ...