Home پاکستان شوکت ترین کا پی ٹی آئی کی حکومت جانے پر وزارت سے...

شوکت ترین کا پی ٹی آئی کی حکومت جانے پر وزارت سے علیحدہ ہونے کا عندیہ

وزیر خزانہ سینیٹر شوکت ترین کا کہنا ہے کہ ملک میں تحریک عدم اعتماد کی وجہ سے غیر یقینی کی صورتحال ہے جو کہ اگلے کچھ دنوں میں ختم ہو جانی چاہیے۔

شوکت ترین نے کہا کہ پاکستان کی ایکسپورٹ 28 فیصد بڑھ گئی ہیں اور ترسیلات زر میں بھی اضافہ ہوا ہے، فروری میں کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ 545 ملین ڈالر ہوگیا ہے جبکہ جاری کھاتوں کے خسارے میں بھی کمی آرہی ہے اور معاشی اشاریے درست سمت میں گامزن ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مہنگائی میں 6 فیصد کمی ہوئی ہے اور اب ملک میں 36 ماہ میں سب سےکم مہنگائی ہے، عوام کو بجلی کی قیمتوں میں 5 روپےفی یونٹ کا ریلیف دیا گیا ہے۔

ایک سوال کے جواب میں وزیر خزانہ نے کہا کہ میں پی ٹی آئی کا منتخب سینیٹر ہوں لوٹا نہیں ہوں، پی ٹی آئی کی حکومت رہی تو میں بھی برقرار رہوں گا لیکن اگر دوسری حکومت آئی اور اس نے مجھے وزیر رہنے کا کہا تو نہیں رہوں گا۔

شوکت ترین کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف نے بجلی اور پیٹرولیم لیوی میں تبدیلی کا پوچھا ہے جس پر ہم نے انہیں بتایا کہ ہم نے کہاں سے پیسہ ایڈجسٹ کیا، آئی ایم ایف مان گیا ہے کہ ہم نے بیلنس کرکے پیسہ دیا ہے، آئی ایم ایف چاہتا ہے کہ اسے معاہدے دکھائے جائیں، آئی ایم ایف کے ساتھ منگل کو ملاقات طے ہے۔

ملک میں ڈیزل کی کمی سے متعلق سوال پر وفاقی وزیر نے کہا کہ ہمارے پاس 34 دن کا ڈیزل اسٹاک ہے، ریکوڈک کے بارے میں آج شام تک فیصلہ ہو جائےگا، اس حوالے سے بڑی خوشخبری دینے والے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Must Read

جنگل کی خوشبو

تحریر؛ پروفیسر محمد عبداللہ بھٹیمیں آرام دہ جو گر نرم و گداز جیکٹ اور ریشمی مفلر سے لیس ہو کر قریبی...

نہ سدھرے توسب بکھر جائے گا !

تحریر؛ شاہد ندیم احمدتحریک انصاف صوائی اسمبلیوں کی تحلیل کے اعلان کے بعد سے شش وپنج میں مبتلا ہے ،اس بات...

نہ سدھرے توسب بکھر جائے گا

تحریر؛ راہیل اکبرلاہور والوں نے بھی عجیب قسمت پائی ہے اس شہر سے جتنے وزیر اعظم بنے ہیں شائد ہی پاکستان...

لاہور کا پہلا نمبر

تحریر؛ راہیل اکبرلاہور والوں نے بھی عجیب قسمت پائی ہے اس شہر سے جتنے وزیر اعظم بنے ہیں شائد ہی پاکستان...

سرائے ادب اور مقام اقبال

تحریر؛ ناصر نقویہمارے معاشرے میں بدقسمتی سے ادب آداب پر بحث و مباحثہ تو ہوتا ہے اور دھواں دار ، چونکہ...