Home بلاگ خاموش خدائی خدمت گار عبد الرشید اور ریاض منصور ٹرسٹ

خاموش خدائی خدمت گار عبد الرشید اور ریاض منصور ٹرسٹ

تحریر؛پیر سید سہیل بخاری
انسانیت کالفظ انسان سیبناہیاور انسان کا لفظ انس سیماخوذہے جس کا مطلب پیار، محبت اور ہمدردی کے ہیز۔ظاہری انسان ہونااور انسانیت کے جزبات اور احساسات رکھنا ان دونوں میں بڑا فرق ہوتا ہے کیونکہ انسان بننے کے بعد ہی کوئی مسلمان بن سکتا ہے۔ پروردگارعالم نیانسان کو اشرف المخلوقات تخلیق کیا ہے کیونکہ وہ پروردگارعالم کا دنیا میں خلیفہ ہوتاہے جس کی وجہ سے انسان انسانیت کیلئے اعلیٰ اسلوب واقدار کے ماتحت زندگی بسرکرتاہے اسلئے وہ حقوق العباد کے احترام کا داعی بن جاتاہیاور حقوق العباد کے ساتھ ساتھ حقوق اللہ کابھی احترام لازمی سمجھتاہے۔ یہ حقیقت ہیکہ ایک جنت تو وہ ہے جو اللہ تعالیٰ نے اپنے بندوں کیلئے بنا رکھی ہے جو اس کے احکامات کے مطابق زندگی بسر کرتے ہیں اور انسان اورانسانیت کی نشوونما کیلئے کام کرتے رہتے ہیں ـ دوسری جنت وہ ہوتی ہے جو انسان اپنے اعمال سے اس دنیا میں بناتا ہے اور انہی انسانوں میں ایک انسان ایسابھی ہے جو انسان اور انسانیت سے محبت کرنے کے طریقے سے آگاہ ہے۔آج ہم انسان اور انسانیت کے سے محبت، پیار،ہمدردی اورخلوص کے جذبے سے سرشار شخصیت کا ذکر کررہے ہیں جوکہ عاشق رسول بھی ہیں اور ایک خاموش خدائی خدمت گار ہیں ۔ اس معروف سماجی شخصیت کانام ہے عبدالرشید جوکہ ایک نامور کاروباری شخصیت ہیں اور مشہور و معروف کاسمیٹکس کمپنی گولڈن پرل کے ڈائریکٹر ہیں ۔ عبدالرشید ایک ٹرسٹ کے بھی روح رواں ہیں ۔ جی ہاںگلشن راوی لاہور میں واقع ” ریاض منصور ٹرسٹ” اس ٹرسٹ کے اغراض و مقاصد معاشرے کے پسے ہوئے طبقہ کی بے لوث خدمت کرناہے ۔ فری میڈیکل ہسپتال جس میں مریضوں کو بلا معاوضہ ادویات فراہم کی جاتی ہیں۔ تھیلیسیمیا کے مرض میں مبتلا بچوں کو خون کی فراہمی اور مناسب علاج کے ساتھ ساتھ بچوں کو گفٹ دیئے جاتے ہیں اور لواحقین کی بھی ضروریاتِ کا مکمل خیال رکھا جاتا ہے۔ یہ سب بے لوث خدمات سرانجام دینے کا سہرا خاموش خدائی خدمت گار عبد الرشید کے سر پر ہے ۔ جو تن تنہا یہ عظیم فریضہ سرانجام دے رہے ہیں ۔اپنی بے شمار کاروباری مصروفیات سے وقت نکال کر ریاض منصور ٹرسٹ کیلئے اپنی زندگی وقف کر رکھی ہے ۔ عبد الرشید جن کو ہم سب ”بھائی جان” پکارتے ہیں بڑے محبت کرنے والے انسان ہیں۔ پروردگارعالم کے پیدا کردہ حُسن کی تعریفیں بھی کرتے ہیں اور قدرتی حُسن کے دلدادہ بھی ہیں۔ اپنی فیملی کے ساتھ ساتھ اپنے پورے خاندان کے ساتھ بھائی چارے کے فروغ میں اہم کردار ادا کرتے ہیں ۔ اپنی والدہ کے بہت خدمت گزار ہیں اپنے بھائی عابد شیخ سے بھی انکی والہانہ محبت کی مثال نہیں ملتی۔ بھائی جان سادات کا بھی بہت احترام، عقیدت رکھتے ہیں۔ کروناوائرس کے دوران سادات کو خمس پیش کرنے میں اپنا ثانی نہیں رکھتے تھے۔ ہر رمضان المبارک کے موقع پر سفید پوش گھرانوں کو انکے گھروں پر بغیر کسی تشہیر کے راشن فراہم کرتے ہیں۔ سارا سال انکے در سے ہر کسی کو خیر ملتی ہے۔ اگر عظیم پاکستان کے ہر کاروباری شخصیت کے بھائی جان عبد الرشید جیسے خیالات ہو جائیں تو پاکستان سے غربت کا خاتمہ ممکن ہو سکتا ہے ـ پروردگارعالم عبدالرشید کو ہمت اور استقامت عطاء فرمائے اور لمبی صحت والی عمر عطا فرمائے کہ وہ انسان اور انسانیت کی مزید بیلوث خدمت کر سکیں ـ آمین ثم آمین یا رب العالمین

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Must Read

انتہائےشہادت امام حسین۴

تحریر: رخسانہ اسد لاہور شاہ است حسین، بادشاہ است حسین……دین است حسین، دین پناہ است حسین……سردادنداددست دردست...

نوشہرہ: گاڑی پر فائرنگ سے پی ٹی آئی رہنما اور ان کے بھائی زخمی ہوگئے

نوشہرہ میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما معتصم باللہ کی گاڑی پر فائرنگ سے وہ خود اور ان...

ایم کیو ایم وفاق اور سندھ حکومت سے پھر ناراض، پالیسی پر نظر ثانی کا مطالبہ

متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان نے وفاقی اور سندھ حکومت سے ناراضی کا اظہار کردیا۔

کراچی: مضر صحت کھانا کھانے سے 2 بچے جاں بحق، والدین کی حالت خراب ہوگئی

کراچی کے علاقے جوہر آباد میں گھر میں مبینہ طور پر مضر صحت کھانا کھانے سے 2 بچے جاں بحق جب...

اینہاں دا کاں تے چٹا ای رہنااے

روداد خیال : صفدر علی خاں اپنے اخبار کی اشاعت کا تسلسل جاری رکھنے کی خاطر سرگرم...