Home بلاگ موجودہ گرمی کی لہر اور حکومتی اقدامات

موجودہ گرمی کی لہر اور حکومتی اقدامات

تحریر ساجد حسین شاہ
حضرتِ علی کرم اللہ وجہہ سے سوال کیا گیا اگر کسی شخص کی قیمت طے کرنا چاہیں تو اسکا معیار کیا ہو سکتا ھے؟ مولا علی نے جواب دیا” احساس زمہ داری ” جس شخص میں جتنا احساس زیادہ ہو گا وہ اتنا ہی زیادہ قیمتی ہو گا اییے ہم اس قول کی رو سے دیکھتے ہیں کہ موجودہ حکومت نے مشکل ترین حالات میں اقتدار کی باگ ڈور سنبھالنے کے بعد اپنی قومی زمہ داریوں کو احساس زمہ داری کے ساتھ موجودہ درپیش مسائل کو کس طرح سنجیدگی سے حل کررہی ھے موجودہ حکومت کو بہت سے چیلنجز کا سامنا ھے جن میں ایک چیلنجز کا تزکرہ کروں گا وہ ھے گلوبل وارمنگ اور بڑھتی ہوئی الودگی کے باعث ہیٹ سٹروک سے پیدا شدہ صورتحال سے نمٹنے کیلئے ہر ممکن اقدامات کو یقینی بنا کر عوام کی زندگیوں کو تحفظ دینا ھے موسمیاتی تبدیلیوں کے نتیجے میں اس سال موسم بہار اتے ہی گرمیوں کا سلسلہ شروع ہو گیا ھے گرمی کی لہر میں اضافہ ہوا ہے طویل اور زیادہ درجہ حرارت میں اضافہ کی وجہ سے شمال میں گلیشیئر تیزی سے پگھل رہے بڑھتا ہوا ماحولیاتی انحطاط ملک کے لئے ایک خطرے کے طور پر ابھرا ہے پاکستان نے گزشتہ 20 سالوں میں 152 شدید موسمی واقعات دیکھے ہیں اور اقوام متحدہ نے پاکستان کو سب سے زیادہ خشک سالی سے متاثرہ 23 ممالک میں شامل کیا ہے اور موسمیاتی تبدیلی کی وجہ سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والے دس ممالک میں شامل ہے یہ صرف پانی کی کمی یا درجہ حرارت میں اضافے کا معاملہ نہیں ہے بلکہ گرمی کی لہر سندھ کی زراعت کو متاثر کرے گی شدید گرمی کی لہر کے اثرات انسانی زندگیوں پر نظر ایں گے ہیٹ ویو کی وجہ سے ملک بھر میں فصلیں بھی متاثر ہوییں سخت گرمی کی وجہ سے کنوں اور ام کی فصل کو بھی نقصان پہنچا ھے چولستان میں پانی کی قلت کی وجہ سے مویشی بھی ہلاک ہو رھے ہیں اس گھمبیر صورتحال سے نمٹنے کیلئے موجودہ حکومت تمام سٹیک ہولڈرز کے ساتھ ملکر مربوط اور موثر اقدامات کو یقینی بناے میں مصروف عمل ہیں اور عملی اقدامات کو یقینی بنایا جارھا ھے تاکہ موجودہ گرمی کی لہر سے اور گلوبل وارمنگ سے ملک میں پیدا ہو نیوالی صورتحال کے پیش نظر ہنگامی اقدامات کو یقینی بنایا جاے وفاقی وزیر برائے موسمیاتی تبدیلی شیری رحمن نے موجودہ صورتحال کے پیش نظر پریس کانفرنس کرتے ہوے بتایا ہے کہ وزیراعظم نے موجودہ ہیٹ ویو اور جی ایل او ایف کے واقعات سے نمٹنے کیلئے ڈیزاسٹرمینجمنٹ کی کوششوں کو تیز کرنے کے لئے قومی ٹاسک فورس تشکیل دی ھے جو موجودہ صورتحال پر کڑی نظر رکھے گی مربوط اور موثر حکمت عملی کے تحت اقدامات کو یقینی بنائے گی شیری رحمان اس بات پر زور دیتے ہوے کہا ھے موجودہ ہیٹ ویو کے دوران عوامی آگاہی کی اشد ضرورت ہے، یہ ہیٹ ویو جون تک جاری رہے گی عوام احتیاطی تدابیر اختیار کریں رواں سال مون سون میں سیلاب کا خطرہ بھی ھے پاکستان میں ہر سال شہروں میں بارش کی وجہ سے سیلاب آتے ہیں اور جاری موسمیاتی تناظر میں یہ خطرہ پہلے سے بڑھ چکا ہے جس کیلئے تمام تر ممکنہ اقدامات مکمل کر رہے ہیں۔ہم نے سندھ اور پنجاب میں ایک ایک ہزار سے زائد ہیٹ ویو مراکز قائم کئے ہیٹ ویو کے عوام پر سنگین اثرات مرتب ہوں گیمحکمہ موسمیات نے جون تک ہیٹ ویو کا عندیہ دیا ہے وزارت اس سلسلے میں صوبوں کو ایڈوائزری بھی جاری کر رہی ھے اگاہی ضروری ہے محکمہ موسمیات موسم کے بارے میں جدید ترین اپ ڈیٹس اور ایڈوائزری جاری کر رہا ہے عوام کو تازہ ترین صورتحال سے باخبر رکھے گا ملک کے مختلف حصوں میں زیادہ درجہ حرارت کی حالیہ لہر کے تناظر میں وفاقی وزیر صحت عبدالقادر پٹیل کی ہدایت پر قومی ادارہ صحت نے ہیٹ سن سٹروک سے متعلق ہدایت کیلئے ایڈوائزری جاری کر دی ہے یہ ایڈوائزری ہیٹ/ سن سٹروک کی روک تھام کیحوالیسیبروقت اور مناسب اقدامات کے لئے صحت کے متعلقہ اداروں کو جاری کی گئی ہیایڈوائزری کے مطابق ہیٹ اسٹروک ایک ایسی طبی حالت ہے جس کابروقت مناسب علاج نہ کیا جائے تو یہ جان لیوا ثابت ہو سکتی ہے۔اسکی علامات میں گرم اور خشک جلد، کمزوری یا سستی، بخار، سردرد، اور دل کی دھڑکن کا تیز ہونا شامل ہے۔ ہیٹ سٹروک کابروقت مناسب طریقے سے علاج نہ کیا جائیتو یہ موت کا سبب بن سکتا ہے یا اعضاء و نقصان پہنچا سکتا ہے یا معذوری کا سبب بن سکتا ہیشیر خوار، 65 سال سے زائد عمر کے افراد ، ذیابیطس اور ہائی بلڈ پریشر کے مریض، ایتھلیٹس اور آؤٹ ڈور کام کرنیوالے ورکرز کو ہیٹ اسٹروک کا زیادہ خطرہ ہوتا ہے۔ایڈوائزری میں مندرجہ ذیل احتیاطی تدابیر پر بھی زور دیا گیا ہے گرم موسم میں زیادہ پانی پئیں زیادہ درجہ حرارت والی جگہوں پر براہ راست سورج کی روشنی میں جانے سے گریز کریں سر کو ٹوپی سے ڈھانپیں اور ہلکے رنگ کے ڈھیلے کپڑے پہنیں براہ راست سورج کی روشنی میں کام کرنے والے افراد کو وافر مقدار میں پانی/ مشروب کا استعمال کرنا چاہیے ایڈوائزری میں تعلیمی اداروں/اسکولوں کو ہدایات دی گئی ہیں کہ طلبہ پر شدید گرمی کے اثرات کو کم کرنے کے لئے مناسب اقدامات کیے جائیں بچے اور نوجوان گرمی کا زیادہ شکار ہوتے ہیں اور اس لیے اسکولوں میں انتہائی گرم موسم سے منسلک خطرات کے لیے تیاری اور ان کا انتظام کرنے کے لیے اقدامات کرنے چاہییں طلبا کو شدید گرم موسم میں ہیٹ سٹروک سے بچانے کے لئے ٹھنڈی اندرونی جگہ کا انتظام کیا جائے بیرونی کھیل کی جگہوں کو سایہ دینے کے لیے مصنوعی شیڈنگ کینوپی، ٹینٹ، سیل، چھتری کا استعمال کریں واٹر کولرز کی تعداد میں اضافہ کریں پینے کے پانی تک رسائی میں اضافہ طلبائ کو ہائیڈریٹ رکھنے کے لئے پینے کے پانی تک رسائی میں اضافی کیا جائے بجلی کے پنکھے ورکنگ حالت میں ہوں ہائی بلڈ پریشر کے مریض، ایتھلیٹس اور آؤٹ ڈور کام کرنیوالے ورکرز کو ہیٹ اسٹروک کا زیادہ خطرہ ہوتا ھے میں سمجھتا ہوں حکومت کو موسمیاتی تبدیلی کے عالمی کنونشن میں پاکستان کا حصہ ھے پر عمل درآمد میں تیزی لانا ہو گی حکومت اپنی زمہ داریوں سے با خبر ھے میں سمجھتاہوں ماحول۔دوست پالیسیاں اور عوام میں اس سلسلے میں آگاہی وقت کی اہم ضرورت ھے ہمیں اپنے جنگلی اور ابی حیات کا تحفظ کرنا ہو گا تعلیمی اداروں میں ماحولیاتی تحفظ کی تدریس کو لازمی قرار دینا ہو گا اپنے شہروں کو کنکریٹ جنگل بننے سے روکنا ہو گا جس کے نتیجے میں جنگلات اور جنگلی حیات کا تیزی سے خاتمہ ہورھا ھے صاف توانائی اور کلین انرجی کو فروغ دینا ہو گا اور اس سلسلے میں عملی اقدامات کرنا ہوں گے شہروں میں کاربن کے اخراج کو ریگولیٹ کرنے کیلئے عملی اقدامات کرنے ہوں گے اخر میں عوام سے اپیل کرتاہوں موجودہ حکومت تمام سٹیک ہولڈرز اور متعلقہ اداروں کے ساتھ ملکر اس گرمی کی لہر سے نمٹنے کیلئے بھر پور خصوصی اقدامات کو عملی جامہ پہنانے میں مصروف ھے جس طرح کرونا وائرس کی وبائ سے نمٹنے کیلئے حکومت کی احتیاطی تدابیر پر عمل کیا ھے کرونا وائرس کی اس جنگ میں پاکستان نے کامیابیاں حاصل کیں ہیں اسی طرح اییے ہم سب ملکر کر ایک اچھے اور زمہ دار شہری کا ثبوت دیتے ہوے حکومت اور متعلقہ اداروں کی گاییڈ لایینز پر عمل کریں اور ہم سب کو احساس زمہ داری کا مظاہرہ کرتے ہوے ایک قیمتی شخص بننا ھے میری خدا پاک سے دعا ھے وہ ہر چیز پر قدرت رکھتا ھے وہ کائنات کا خالق ومالک ھے ہر چیز اس کے تابع ھے خدا ہم سب کو اپنی حفظ اور امان میں رکھے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Must Read

دعا زہرا کی عمر 15سے 16سال کے درمیان ہے: میڈیکل بورڈ کی رپورٹ

کراچی کی مقامی عدالت کے حکم پر میڈیکل بورڈ نے دعا زہرا کی عمرکے تعین سے متعلق رپورٹ جمع کرادی۔

کپتان سمیت قومی ہاکی کھلاڑیوں کا نوکریاں دینے کا مطالبہ

کامن ویلتھ گیمز کی تیاریوں کے سلسلے میں پاکستان ہاکی ٹیم کا ٹریننگ کیمپ ان دنوں لاہور میں جاری ہے لیکن...

ملک بھر میں سندھ کورونا کیسز میں سب سے آگے

ملک بھر میں یومیہ رپورٹ ہونے والےکورونا کیسز میں سندھ سب سے آگے ہے۔ نیشنل کمانڈ اینڈ...

رمیز راجا اور سابق کرکٹرز کی ملاقات کی اندرونی کہانی

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئر مین رمیز راجاکی کراچی میں سابق کرکٹرز کے ساتھ ملاقات کی دلچسپ اندرونی کہانی منظر عام...

عمران خان نے اوورسیزپاکستانیوں کے ووٹ سے متعلق ترمیم کو چیلنج کردیا

سابق وزیراعظم عمران خان نے اوورسیزپاکستانیوں کے ووٹ سے متعلق ترمیم کو سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا۔