Home بلاگ فین کلب

فین کلب

تحریر؛ پروفیسر عبداللہ بھٹی
دوپہر کا وقت مئی کا مہینہ آسمان پر بادلوں کا ایک بھی ٹکڑا نہیں تھا سورج صبح سے ہی سوا نیزے پر آگیا تھا سورج کے تیور بتا رہے تھے کہ آج وہ زمین کو تندور بنا کر زمین کے باسیوں کو کباب بنا کر چھوڑے گا میں سورج کے تیور دیکھ کر گھر کے اندر اے سی کی خوشگوار ٹھنڈک میں ایک کتاب کے سحر میںگم تھا مصنف کی نثر نگاری اور سسپنس پورے جوبن پر تھا میں کتاب کے سحر میں غرق دنیا سے غافل ہو چکا تھا حقیقت میں مصنف مجھے اپنی قید میں جکڑنے میں کامیاب ہو چکا تھا میں اِس وقت کسی قسم کی دخل اندازی برداشت کر نے کے موڈ میںنہیں تھا اِسی وقت کسی نے شکر دوپہرے دروازے پر آکر ڈور بیل نان سٹاپ بجانا شروع کر دی میںنظر انداز کرنے کے موڈ میں تھا کیونکہ کتاب کا نشہ سر چڑھ کر بول رہا تھا میری ساری کائنات اِس وقت کتا ب کے اوراق میںسمٹ آئی تھی ملازمہ حسب معمول گئی جا کر مذاکرات کئے لیکن آنے والوں نے ملازمہ کی ایک نہ سنی منتوں ترلوں پر اُتر آئے تو ملازمہ کا جذبہ ہمدردی بیدار ہوا تو ڈرتے ڈرتے میرے پاس آکر سہمے لہجے میں بولی باہر کوئی آنٹی اپنی جوان بیٹی کے ساتھ آئی ہیں دونوں بہت رو رہی ہیں کہ ہم نے ہر صورت میں پروفیسر صاحب سے مل کر جانا ہے اگر وہ گھر پر نہیں ہیں تو دروازہ کھول وہ ہم تو رات تک ادھر ہی بیٹھ کر انتظار کریں گے ۔ساتھ ہی ملازمہ نے دبے لفظوں میں سفارش بھی کر دی کہ انہوں نے واپس تو جانا نہیں اِس لیے آپ مل لیں ۔بیچاری کڑی دھوپ میں کھڑی ہیں ملازمہ کی بات سن کر میرا خدمت خلق کا جذبہ بھی انگڑائی لے کر بیدار ہو گیا میں نے کتاب کو بند کیا اور مین دروازے کی طرف چل دیا دروازہ کھولا تو ایک ادھیڑ عمر کی عورت اپنی جوان بیٹی کے ساتھ کھڑی تھی مجھے دیکھ کر اللہ کا شکر ادا کرنے لگیں کہ میں گھر پر موجود ہوں میںجلدی سے دونوں کو ڈرائینگ روم میں لے آیا تاکہ دونوں کی بات سننے کے بعد پھر کتاب کی دنیا میں گم ہو سکوں دونوں کو ٹھنڈا میٹھا مشروب پلایا تو عورت کچھ نارمل ہو ئی بولی سر میںآپ سے فون پر وظیفہ لے چکی ہوں اللہ کے کرم اور وظیفے کی برکت سے میری بیٹی کی اچھی جگہ منگنی ہو گئی سب بہت اچھا چل رہا تھا ایک ماہ بعد شادی تھی چند دن پہلے ہم بیٹے والوں کی طرف فائنل تیاریوں کے سلسلے میں گئے تو وہاں پر بیٹے کا ماموں بھی آیا ہوا تھا کھانے کے بعد گپ شپ کا دور شروع ہوا بات ملکی سیاست پر آگئی میرے میاں بھٹو صاحب کے دیوانے بیٹا شریف فیملی کا مداح جبکہ ماموں عمران خان کے ڈائی ہارڈ فین شروع میں ہلکی پھلکی گفتگو ہو تی رہی لیکن جیسے جیسے گفتگو کا سلسلہ دراز ہو رہا تھا لہجوں میں شائستگی مروت مٹھاس کم ہونے کی بجائے آواز بلند ہو رہی تھی اب بحث اِس نقطے پر آکر پھنس گئی کہ قائد اعظم کے بعد اگر کوئی لیڈر آیا ہے تو وہ عمران خان ہیں جبکہ میرے میاں صاحب کی رگوں میں تو بھٹو کی محبت جاگتی ہے بیٹے نے درمیان میں شریف فیملی کی تعریفیں شروع کر دیں بات تلخ کلامی سے گالی گلوچ میں داخل ہو گئی میں نے اشاروں میں میاں بیٹے کو بہت سمجھانے روکنے کی کو شش کی لیکن میاں اور بیٹا اِس زعم میں کہ ہم لڑکے کے گھر والوں سے نہیں وہاں پر آئے مہمان سے گفتگو کر رہے ہیں جب بات لیڈروں کو گالیاں دینے پر آئی تو میں ڈر گئی میاں بیٹے کو پکڑا اور گھر آگئی گھر آکر میاں اور بیٹے سے خوب لڑائی کی کہ آپ لوگوں نے بہت غلط کام کیا ہم لڑکی والے ہیں وہاں اونچی آواز میں بات نہیں کرنی چاہیے تھی تو دونوں بولے ان کے ماموں دھڑلے سے ہمارے لیڈروں پر الزامات اور گالیاں دے رہے تھے تو ہم کیسے برداشت کرتے اگلے دن جس کا ڈر تھا وہ ہو گیا لڑکے والوں کی طرف سے فون آگیا کہ آپ لوگوں نے ہمارے ماموں صاحب کی بے عزتی کی ہے اب ماموں جی اِس بات پر اڑ گئے ہیں کہ اگر آپ لوگوں نے یہاں رشتہ کیا تو میرا آپ لوگوں سے جینا مرنا ختم اور نہ ہیں میںآپ کی شادی پر آئوں گا لڑکے والوں نے انکار پر گھر میں صف ماتم بچھ گئی بہت فون کئے معافیاں مانگیں لیکن لڑکے والے بضد کہ ماموں نہیں مان رہے جب مسئلہ حل نہ ہوا تو دونوں ماں بیٹی میرے گھر پر آگئیں میں نے دونوں کو سمجھایا کہ جا کر ماموں سے معافی مانگ لو اور وہاں عہد اقرار کرو کہ ہمارا سیاست سے کوئی تعلق نہیں ہے ساتھ میں وظیفہ بھی دیا کہ جا کر اللہ سے دعا مانگو ایک ہفتے بعد ماں کا فون آیا کہ آپ کے مشورے پر ہم نے جا کر ماموں جی سے معافی مانگی ہے اُن کے دوستوں کو بیچ میں ڈالا تو بڑی مشکلوں سے ماموں جان مان گئے ہیں اور ہمارا رشتہ ٹوٹنے سے بچ گیا ہے اِس وقت وطن عزیز میں عوام کے مختلف فین کلب بن چکے ہیں آپ کسی فنکشن شادی یہاں تک کے کسی فوتگی والے گھر چلے جائی…

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Must Read

ہر اسکریچ کارڈ پر 5 روپے اضافی وصولی، کمپنی کا مؤقف سامنے آگیا

پاکستان میں آپریٹ کرنے والی ایک غیر ملکی موبائل کمپنی نے اخراجات میں اضافے کو جواز بنا کر صارفین سے ہر...

فریضہ حج کی ادائیگی کیلئے آنے والے 5 پاکستانی عازمین انتقال کرگئے

مکہ مکرمہ : فریضہ حج کی ادائیگی کیلئے سعودی عرب جانے والے 5 پاکستانی عازمین انتقال کرگئے۔

ملک میں سونا مزید سستا ہوگیا

ملک میں آج ایک تولہ سونے کی قیمت میں 350 روپے کی کمی ہوئی ہے۔ سندھ صرافہ...

اسحاق ڈار کو نیا پاسپورٹ مل گیا، پاکستان واپسی کی تیاریاں بھی مکمل: ذرائع

ن لیگ کے رہنما اور سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو نیا پاکستانی پاسپورٹ مل گیا۔ قابل...

انگلینڈ کے ورلڈکپ وننگ کپتان اوئن مورگن انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائر

انگلینڈ کے ورلڈکپ وننگ کپتان اوئن مورگن نے انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا۔ انگلینڈ نے مورگن کی...