Home بلاگ 91 سالہ Mrs Reena Chhibber Vrrma کی پذیرائی

91 سالہ Mrs Reena Chhibber Vrrma کی پذیرائی

منشاقاضی
حسب منشا

علی گڑھ یونیورسٹی میں ایک مہمان خاص کی آمد پر اساتذہ , طلبا اور وائس چانسلر دیدہ و دل فرش راہ کیئے ہوئے تھے , یونیورسٹی کی چار دیواری کے باہر سب انتظار میں مؤدب ایستادہ تھے کہ دفعتأ ایک گاڑی پہنچی تو اسے یونیورسٹی گیٹ سے وکٹوریا گیٹ تک طلبا کے گھڑ سوار دستے کے جلو میں لایا گیا , مہمان خاص باہر آئی تو دیکھا کہ ایک بوڑھی خاتون کھدر کی ساڑھی میں ملبوس , پاؤں میں ہوائی چپل , موٹے شیشے والی عینک لگائے ہوئے تھی , یہ ایک طویل واقع ہے بتانا مقصود یہ ہے کہ شخصیت کس چیز کا نام ہے , کھدر کی ساڑھی اور ہوائی چپل شخصیت کے وقار اور اس کی عظمت کو کم نہیں کرتے , یہ خاتون یوپی کی گورنر بلبل ہند سروجنی نائیڈو تھیں اور آج ایک اور مہمان ہندوستان سے راولپنڈی اپنا گھر دیکھنے کی جستجو میں اپنی آرزو پوری کرنے کے لیئے آئی تھی , 91 سالہ رینا ورما کی جواں فکر قوت ارادی دیکھ کر عقل دنگ اور طبیعت رنگ و نور میں ڈھل گئی , وہ بار بار یہی کہہ رہی تھی کہ میں نے اپنا گھر دیکھنا ہے , پہلے انہیں اپنا مکان دیکھنا تھا اور ایک رات جب رینا نے مکان میں گزار تو وہ ایک دن اور رات کے لیئے گھر میں بدل گیا , مکان کتنا ہی خوبصورت ہو صاحب خانہ کے بغیر دور تک صحرا ہی صحرا ہوتا ہے , مکان ہاتھوں سے اور گھر دل سے آباد ہوتے ہیں , جس طرح ہم نے اپنی میزبان خاص محترمہ نوشابہ شہزاد کا گھر اور ان کے گھر کے ہر فرد کو اخلاقی لحاظ سے بلند اخلاق اور اخلاص کا پیکر متحرک پایا , دنیا میں گھر کے علاوہ ایسا کوئی کالج نہیں جس میں انسانیت کی تعلیم اس سے بڑھ کر ہوتی ہو , آدمی میں آدمیت گھر ہی سے پیدا ہوتی ہے , رینا کا 75 سال مکان ایک دن کے لیئے گھر میں بدل گیا پونا شہر ہندوستان کی 91 سالہ خاتون رینا کی پیری میں بھی حسن نمایاں تھا , سابق ڈسٹرکٹ گورنر شہزاد احمد , ڈپٹی گورنر عبدالحلیم , اسسٹنٹ گورنر محترمہ مریم اعجاز , صدر تنویر ارشد چوہدری , سیکرٹری محمد کاشف روٹیرین محترمہ نوشابہ شہزاد , ماضی کے صدر جناب جی آر صدیقی , سابق صدر سید راشد علی رضوی , روٹیرین محمد صابر نظامی , روٹیرین رابیل بٹ , میجر (ر ) ڈاکٹر نبیل , روٹیرین ساجد حمید چوہدری , روٹیرین میجر (ر ) انجم افروز رانا کی رعنائی خیال کی آب جو بہہ رہی تھی , موصوف سابقہ اسسٹنٹ گورنر اور پال ہیرس فیلو بھی ہیں اور سپیشل بچوں کے لیئے روٹری کلب لاہور گیریزن اور ,, ماں ,, نامی تنظیم کو فعال اور متحرک رکھے ہوئے ہیں , آپ سب نے پرتپاک اور دل و جان سے موصوفہ کی پذیرائی کی , یہ پذیرائی محترمہ کے لیئے مسیحائی سے کم نہ تھی , موصوفہ کا ملکہ ء کوہسار سے عشق اور اپنے مکان کے در و دیوار سے دیوانہ وار محبت کے مناظر نوشابہ شہزاد نے دیکھے ہیں , 91 سالہ مہذب خاتون کو دیکھ کر یوں محسوس ہوتا تھا کاش زندگی پیری سے شروع ہو کر بچپن کی طرف لوٹتی تو کیا ہوتا , موصوفہ اپنے ملک میں پاکستان کے لوگوں کے حوالے سے جو پیغامات لے کر جا رہی ہے وہ بہت حسین ہیں , یہ ہندو خاتون مسلمانوں کی ہمدرد ہے اور اس کے جذبات و احساسات میں انسانیت کا احترام ہویدا تھا , گو یہ سروجنی نائیڈو تو نہ تھی جس نے مسلمانوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ,, اگرچہ میں تمہارے دوش بدوش کھڑے ہونے کے باوجود تمہاری نظروں میں ایک کافرہ ہوں مگر تمہارے سارے خوابوں میں تمہاری شریک ہوں , میں تمہارے خوابوں اور بلند خیالوں میں بھی تمہارے دوش بدوش ہوں کیونکہ اسلام کے نظریات بنیادی اور حتمی طور پر اتنے ترقی پسند نظریات ہیں کہ کوئی انسان جو ترقی سے محبت کرتا ہو ان پر ایمان لانے سے انکار نہیں کر سکتا , (آواز دوست) میں ان گرانمایہ جملوں پر جب بھی غور کرتا ہوں تو روٹری کلب لاہور گیریزن کے تمام عہدیداران اس پر پورے اترتے ہیں , جنہوں نے اسلام کے ترقی پسند نظریات کو حرز جاں بنا لیا ہے , تعلیم , صحت , ماحول , روزگار , خودانحصاری اور خود کفالت کے لیئے یہ قافلہ ء نو بہار اپنی منزل مراد پر پہنچ کر دم لے گا اور دنیا جان لے گی کہ خوشحال معاشرے کی تشکیل اور فکر جمیل کا عکاس یہ کلب پاکستان کی ترقی اور تعمیر میں اپنے حصے کی شمع کیونکر فروزاں کر رہا ہے , رینا نے ایک گھر پنڈی میں دیکھا اور دوسرا گھر لاہور میں محترمہ نوشابہ شہزاد کا دیکھا واقعی مریم اعجاز سچ فرما رہی تھی کہ نوشابہ شہزاد کا گھر ایک مثالی گھر ہے جہاں کا ماحول اپنی فضا میں شائستگی اور شگفتگی کے پھولوں کی مہک سے مہک رہا تھا , میں بے بہا ممنون احسان ہوں ڈپٹی گورنر جناب عبدالحلیم کا جنہوں نے مجھے اس عشائیہ میں دعوت دی اور جس کی توثیق اسسٹنٹ گورنر مریم اعجاز نے کی اور اشتیاق و تجسس کو سابق ڈسٹرکٹ گورنر جناب شہزاد احمد نے تحریک دی اور ان کی آکسیجن نے مجھے خوبصورت ماحول تک رسائی دی , واقعی خیال کی قوت بہت زبردست ہوتی ہے , جناب جی آر صدیقی شجر کاری کی تازہ کاری کے ماہر ہیں اور رانا انجم صاحب انجیر کے دلدادہ ہیں , ان کی خواہش تجویز میں ڈھل گئی اور آشیانہ قائد میں شجر کاری مہم کا سلسلہ جب شروع ہو گا اس کو بھی پذیرائی ملے گی , سابق ڈسٹرکٹ گورنر جناب شہزاد احمد نے مہمان خاتون رینا کو کرنل( ر ) نواب علی کی تصنیف ,, ہوشیار پور سے لائلپور تک ,, پیش کی اور اسسٹنٹ گورنر مریم اعجاز نے ادب لطیف نمبر پیش کیا اور مجھے بھی شہزاد احمد نے ایک نسخہ ہوشیار پور سے لائلپور تک ,, پیش کیا , آخر میں چند خیراتی اداروں کے لیئیے گرانٹ کا بھی تذکرہ ہوا جن میں شوکت خانم سر فہرست اور آبرو سکول کے علاوہ رحمن فاؤبڈیشن کا نام بھی موجود ہے , سابق ڈسٹرکٹ گورنر جناب شہزاد احمد اور اسسٹنٹ گورنر محترمہ مریم اعجاز رحمن فاؤنڈیشن کا دورہ اور بلیغ معائنہ فرما چکے ہیں اور اب موجودہ صدر تنویر ارشد چوہدری بھی اپنی مصروفیات سے چند لمحات نکال کر اپنی آنکھوں سے اس مسیحا کو دیکھیں گے جسے خلق خدا ڈاکٹر وقار احمد نیاز کے نام سے جانتی ہے , , , محترمہ نوشابہ شہزاد , ان کی سلیقہ شعار دختران , فرزند سعادت مند اور اعلی تعلیمی امتیاز سے متصف شریک حیات کی عادات نے بے بہا متاثر کیا , واقعی گھر ہو تو ایسا ہی ہو , مکان لاکھوں دیکھے ہیں لیکن گھر کوئی کوئی ہوتا ہے , مکان ہاتھوں سے تعمیر ہوتے ہیں اور گھر دل سے آباد ہوتے ہیں , نوشابہ شہزاد کا گھر جنت سے کم نہیں تھا , ماحول میں تہزیب , ہر چیز میں ترتیب اور تزئین و آرائش کے عقب میں صاحب خانہ کا منصوبہ ساز ذہن کارفرما نظر آتا تھا ,

سلیقہ انتہا کا چاہیئے موتی پرونے میں

جناب عبدالحلیم صاحب نے محترمہ رینا سے واپسی کا پوچھا اور مکرر آمد کی خواہش پوچھی تو وہ متبسم ریز مسکراہٹ کے ساتھ حسرتوں کے ہجوم میں فرما رہی تھیں جب حکومت نے دوبارہ اجازت دے دی تو ضرور آؤں گی , میری محترمہ رینا سے استدعا کہ وہ اپنی حکومت تک اپنے جذبات پہچائیں اور مودی کو موم کریں کہ وہ سری نگر کے چناروں کا حسن پامال نہ کریں اور اس جنت نظیر خطے کے فطرتی مناظر کو خون آشام ماحول سے نکال دیں , , روٹری کلب لاہور گیریزن کا پیغام یہی ہے کہ

ہمارا پیغام محبت ہے جہاں تک پہنچے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Must Read

’کیا ہم واقعی آزاد ہیں؟

تحریر : ایم فاروق انجم بھٹہ سوچیۓ کہ اگر ہم واقعی آزاد ہیں تو اب بھی ہم...

جناح انمول ہے

منشاقاضیحسب منشا شاعر مشرق علامہ اقبال نے چراغ رخ زیبا لے کر اس ہستی کو تلاش کر...

پی سی بی نے تینوں فارمیٹ کیلئے 33 کھلاڑیوں کے سینٹرل کنٹریکٹ جاری کر دیے

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے تینوں فارمیٹ کے لیے 33 کھلاڑیوں کے سینٹرل کنٹریکٹ جاری کردیے ، ٹیم کے...

کراچی میں شدید بارشیں، انٹرمیڈیٹ کے 13 اگست کے پرچے اور پریکٹیکلز ملتوی

اعلیٰ ثانوی تعلیمی بورڈ کراچی نے شہر میں شدید بارشوں کے پیش نظر ہفتہ 13 اگست کو ہونے والے انٹرمیڈیٹ کے...

ٹکٹ کی مد میں 20 روپے زیادہ کیوں لیے؟ شہری 22 سال بعد مقدمہ جیت گیا

بھارتی شہری ریلوے ٹکٹ کی مد میں 20 روپے زیادہ لینے کے خلاف کیا گیا مقدمہ بلآخر 22 سال بعد جیت...